آلو کے پکوڑے

42

پاکستان میں پکوڑے بہت شوق سے کھائے جاتے ہیں ،پکوڑے کئی طرح کے بنائے اور پسند کئے جاتے ہیں جیسے(بریڈ پکوڑا ، بینگن ،پیاز ،گوبھی ،ہری مرچ اور پالک کے پکوڑے )لیکن ا?لو کے پکوڑے سب سے زیادہ پسند کئے جاتے ہیں انھیں ہری مری چٹنی ،لال چٹنی یا کیچپ کے ساتھ شوق سے کھایا جاتا ہے۔

آلو کے پکوڑے بنانے کے اجزاء

بیسن 2 کپ
نمک حسب ذائقہ
کٹا ہوا زیرہ 1/2 چائے کا چمچ
پسی ہوئی لال مرچ 1 چائے کا چمچ
پسا ہوا دھنیا 1/2چائے کا چمچ
کٹا ہوا دھنیا 1/4 چائے کا چمچ
کھانے کا سوڈا 1/4 چوتھائی چائے کا چمچ
پانی حسب ضرورت ( آمیزہ بنانے کے لئے )
آلو 2 عدد ( باریک سلائس میں کٹے ہوئے )

ترکیب

۱۔ایک بڑے پیالے میں بیسن کو دو دے تین دفعہ چھان کر اس میں تمام مصالحے ( نمک ،لال مرچ ،پسا ہوا دھنیا ،کٹا ہوا دھنیا ،کٹا ہوا زیرہ اور کھانے کا سوڈا شامل کر لیں ) اب ا?ہستہ ا?ہستہ پانی شامل کرتے جائیں اور گاڑھا بیٹر بنا لیں ،اچھی طرح بیٹر کو مکس کریں اور ۰۳ سے ۰۴ منٹ کے لئے ڈھک کر رکھ دیں۔
۲۔یاد رکھیں بیٹر زیادہ پتلا نہیں ہونا چاہئے ورنہ وہ ا?لوؤں پر کوٹ نہیں ہو گا اور بہے جائے گا۔ اور نہ ہی زیادہ گاڑھا ہونا چاہئے۔ اگر ا?پ کو بیٹر زیادہ پتلا لگے تو تھوڑا سا بیسب ڈال کر بیٹر گاڑھا بنا سکتے ہیں
۳۔ا?لوؤں کو دھو کر چھیل کر تیز چھری سے سلائس میں کاٹ لیں ،ا?لوؤں کو کاٹ کر دیر تک باہر نہ چھوڑیں ورنہ وہ کالے ہو جائیں گے۔ ا?لوؤں کو کاٹ کر نمک کے پانی میں بھی ڈالا جا سکتا ہے۔
۴۔اب ایک کڑاہی میں پکوڑوں کو ڈیپ فرائی کرنے کے لئے تیل گرم کریں۔اب ایک ایک ا?لو کے سلائس کو بیسن کے بیٹر میں ڈپ کر کے کڑاہی میں درمیانی ا?نچ پر فرائی کرتے جائیں ،جب ایک سائڈ سے پکوڑے لائٹ گولڈن ہو جائیں تو دوسری جانب سے بھی فرائی کرتے جائیں ،پکوڑوں کو اس وقت تک فرائی کریں ج ب تک کہ وہ گولڈان اور کرارے نہ ہو جائیں ،اب پکوڑوں کو فرائی کر کے ٹشو پیپر یا کچن پیپر پر نکالتے جائیں
۵۔گرم گرم پکوڑوں پر پر چاٹ مصالحہ چھڑک کر کیچپ یا چٹنی کے ساتھ نوش فرمائیں۔

تبصرے
Loading...

Connection Information

To perform the requested action, WordPress needs to access your web server. Please enter your FTP credentials to proceed. If you do not remember your credentials, you should contact your web host.

Connection Type