سہانجنہ کے پھول ،پتیوں اورپھلیوں کے بے شمار طبی فوائد

1,587

دوا کے ساتھ ساتھ غذا کے طور پر بھی کاربوہائیڈ ریٹ،پروٹین،فائبر،وٹامنز اورمنرلزسے بھرپورسہانجنہ زبردست غذائی افادیت کی حامل ہوتی ہیں۔اسکے پتے،پھول اورپھل سبزی کے طورپراستعمال کیے جاتے ہیں۔سہانجنہ کے پودے کے تمام حصوں میں قدرت نے شفابخش صلاحیت رکھی ہے۔
اسکے پتوں میں خصوصاً متعدد طبی خواص اورآئرن کے اجزاء پائے جاتے ہیں۔اسکاسوپ بہت طاقتور ہوتاہے۔شیرخواربچوں سے لے کربزرگوں تک یہ سبزی بڑی کارآمد اورصحت بخش ثابت ہوتی ہے۔
اگر آپ اس سبزی سے ناواقف ہیں تو اسکے لامحدود فوائد میں سے چند فوائد جاننے کے بعد اسے اپنی خوراک کاحصہ ضرور بنائیں گے۔

۱۔جوڑوں کے درد میں مبتلاافراد کے لئے سہانجنہ بے حد مفید ہے۔اسے اپنی خوراک کاحصہ بنائیں اوردرد سے نجات پائیں۔
۲۔ایک گلاس پانی میں سہانجنہ کے پھول دوسے تین عدد،سہانجنہ کی پھلی ڈیڑھ انچ کاٹکڑا،سہانجنہ کی پتیاں ایک چمچ ڈال کربلینڈ کرلیں۔ناشتہ کے دوگھنٹے بعد پی لیں اگر کڑوا لگے تو آدھاکپ دہی شامل کرلیں۔اس سے بینائی تیز،وزن کم،ہڈیوں کابھربھراپن ختم ،جھریاں چھائیاں سب ختم اورجگر صحیح کام کرے گا۔
۳۔مخصوص ایام کی خرابی دور کرنے کیلئے آدھی پھلی ڈیڑھ گلاس پانی میں ڈال کراتناابالیں کہ ایک گلاس رہ جائے پھر یہ پی لیں ۔اس سے مخصوص ایام کی خرابی کے ساتھ اس سے ہونے والاجوڑوں کادرد بھی دور ہوگا۔
۴۔سہانجنہ کے پتے پیس کردہی میں ملاکرروزانہ رات سونے سے پہلے ایکنی پرلگانے سے ایکنی دور ہوجاتی ہے۔
۵۔بچوں کے ریشز پر سہانجنہ کے پتے پیس کرکھوپرے کے تیل میں ملاکرلگانے سے ریشز دور ہوجاتے ہیں۔
۶۔سہانجنہ کے آٹھ سے دس پتے ایک کپ پانی میں بلینڈ کرکے پینے سے مرگی کے مریض ٹھیک ہوسکتے ہیں۔
۷۔سہانجنہ کی ایک پھلی،اورسوگرام سہانجنہ کے پتے سوگرام،لونگ سات عدد،جائفل ایک عدد،بڑی الائچی ایک عدد،دارچینی ایک ٹکڑا تین گلاس پانی میں اتناپکائیں کہ دوگلاس رہ جائے۔دن میں تین دفعہ چار چمچ سے یہ پیناشروع کریں اورایک کپ دن میں تین دفعہ تک لے جائیں۔دق،فالج،ریشا اورمہروں کی ہربیماری دورہوجائے گی۔
۸۔بچوں کاوزن نہ بڑھنے کی شکایت کے تحت سہانجنہ سے بچوں کی صحت اور وزن میں اضافہ کیاجاسکتاہے۔ایک چمچ اسکے پتوں کارس بچوں کودودھ میں ملاکرپلانے سے ہڈیاں مضبوط ہوتی ہیں۔
۹۔سہانجنہ کے پھول سکھاکررکھ لیں۔ڈیڑھ کپ پانی میں تھوڑے سے پھول ڈال کراتناپکالیں کہ ایک کپ رہ جائے تو پی لیں اس سے وزن کم ہوگا۔
۱۰۔خون صاف کرنے میں لاجواب دواکاکام کرتی ہے۔گردہ اورمثانہ کہ پتھری توڑنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔
۱۱۔گیس،جگراورمعدہ کے مسائل کو ٹھیک اورپیٹ کے کیڑوں کوہلاک کردیتی ہے۔
۱۲۔دمہ اورکھانسی میں مبتلاافراد کیلئے مفید سبزی ہے۔یہ ان امراض کوختم کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔
۱۳۔نظر کوتیز کرتی ہے اورپیٹ اورتلی کے درد کوختم کرتی ہے۔
۱۴۔سہانجنہ اعلیٰ قسم کے جراثیم کش اثرات رکھتی ہے اسی لئے اسکااستعمال انفیکشن سے تحفظ دیتاہے۔
۱۵۔سہانجنہ کے پھولوں کودودھ میں ابال کرپینے سے جنسی کمزوری اوربانجھ پن دورہوتاہے۔
۱۶۔سہانجنہ کے پتوں کارس ایک چمچ لے کرگاجر کے رس میں ملاکرپینے سے پیشاب کے تمام امراض دورہوجاتے ہیں۔گاجر کی جگہ گرمیوں میں کھیرے کارس بھی لیاجاسکتاہے۔
۱۷۔ہاضمے کی بے قاعدگی میں بے حد مفید ہے۔معدہ کے مسائل کاآسان حل ہے۔
۱۸۔ایک چمچ اسکے پتوں کارس ناریل کے پانی میں ملاکرپینے سے بڑی آنت کی سوزش اوریرقان دورہوتاہے۔
۱۹۔سہانجنہ سے رحم کی کمزوری دورہوتی ہے اسی لئے زچگی میں آسانی اورزچگی کے بعد ہونے والی پیچیدگیوں سے حفاظت رہتی ہے۔
۲۰۔سہانجنہ کے پتوں کوسبزی کے طورپراستعمال کرنے سے زچگی کے بعد خواتین کے دودھ میں اضافہ ہوتاہے۔جوبچے کی صحت کاضامن ہے۔

تبصرے
Loading...

Connection Information

To perform the requested action, WordPress needs to access your web server. Please enter your FTP credentials to proceed. If you do not remember your credentials, you should contact your web host.

Connection Type