تمباکو نوشی ذیابیطس کا خطرہ بڑھانے کا باعث

511

ایک نئی طبی تحقیق کے مطابق اگرآپ ذیابیطس جیسے مرض سے بچنا چاہتے ہیں تو اپنے اندر موجود تمباکو نوشی کی عادت کو فوری ترک کردیں۔

تمباکو نوشی کے عادی اور سیگریٹ کے دھویں کی زد میں آنے والے افراد میں ذیابیطس ٹائپ ٹو کا خطرہ بہت زیادہ ہوتا ہے۔یہ بات امریکا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی ہے۔ہاورڈ اسکول آف پبلک ہیلتھ کی تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ مردوں میں 11.7 فیصد اور خواتین میں 2.4 فیصد ذیابیطس کے کیسز کی وجہ تمباکو نوشی ہے، تاہم اس عادت کو ترک کرنے سے یہ خطرہ کم ہوجاتا ہے۔تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ سیگریٹ نوشی کو ذیابیطس کے حوالے سے ایک اہم خطرہ سمجھا جانا چاہئے ۔ اس عادت کو ترک کرنے کی کوششوں سے عالمی سطح پر وباء بن جانے والی ذیابیطس ٹائپ ٹو کو کافی حد تک کم کیا جاسکتا ہے۔خیال رہے کہ تمباکو نوشی سے کینسر، سانس کے امراض اور خون کی شریانوں کے امراض کا خطرہ ہوتا ہے جیسا سابقہ تحقیقی رپورٹس میں سامنے آچکا ہے مگر یہ پہلی بار ہے کہ تمباکو نوشی اور ذیابیطس ٹائپ ٹو کے درمیان تعلق کو سامنے لایا گیا ہے۔محققین کے مطابق اس عادت سے دور رہنے والے افراد کے برعکس تمباکو نوشی کرنے والے لوگوں میں ذیابیطس کا خطرہ 37 فیصدہے جبکہ اسے ترک کرنے والوں میں 14 فیصد اور دھویں سے متاثر ہونے والوں میں 22 فیصد تک ہوتا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں
تبصرے
Loading...