آنتوں میں رکاوٹ1 – ایچ ٹی وی اردو https://htv.com.pk/ur Mon, 22 Mar 2021 11:38:33 +0000 ur hourly 1 https://htv.com.pk/ur/wp-content/uploads/2017/10/cropped-logo-2-32x32.png آنتوں میں رکاوٹ1 – ایچ ٹی وی اردو https://htv.com.pk/ur 32 32 معدے میں تیزابیت کے فوری گھریلو علاج https://htv.com.pk/ur/health/acidity-ko-kis-tarah-khatam-karay-2 Tue, 16 Jan 2018 06:00:46 +0000 http://htv.com.pk/ur/?p=22429 acidity

معدے میں زیادہ ایسڈ کا اخراج تیزابیت کا باعث بنتا ہے جس کی وجہ سے پیٹ میں درد، گیس اور سانس میں بدبو پیدا ہوجاتی ہے ۔ زیادہ وقت بھوکا رہنے ، خالی پیٹ یا چائے اور کافی کا زیادہ استعمال تیزابیت کا باعث بنتا ہے۔ اس کے علاوہ جب ہم مرغن مصالحے دار کھانا […]

The post معدے میں تیزابیت کے فوری گھریلو علاج appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
acidity

معدے میں زیادہ ایسڈ کا اخراج تیزابیت کا باعث بنتا ہے جس کی وجہ سے پیٹ میں درد، گیس اور سانس میں بدبو پیدا ہوجاتی ہے ۔ زیادہ وقت بھوکا رہنے ، خالی پیٹ یا چائے اور کافی کا زیادہ استعمال تیزابیت کا باعث بنتا ہے۔ اس کے علاوہ جب ہم مرغن مصالحے دار کھانا کھاتے ہیں تو اس کی وجہ سے بھی معدے میں ایسڈ زیادہ بنتا ہے جو سینے میں جلن پیدا کرتا ہے۔
آپ کے باورچی خانے میں بہت سی ایسی چیزیں موجود ہوتی ہیںجو آپ تیزابیت کو دور کرنے کے لیے استعمال کرسکتے ہیں۔

تلسی کے پتے:

تلسی کے پتوں میں گیس کو ختم کرکے سکون پہنچانے کی خصوصیات موجود ہیںجن سے تیزابیت میں فوری آرام آتا ہے۔ جب بھی پیٹ میں گیس محسوس ہو تلسی کے چند پتے دھوکر چبالیں یا ۳ سے ۴ پتوں کو ایک کپ پانی کے ساتھ ابالیں چند منٹ پکنے دیں پھر چھان کر پی لیں۔

سونف:

کھانے کے بعد سونف کھالینے سے بھی تیزابیت سے بچا جاسکتا ہے ۔ نظام ہضم درست رکھنے کے لیے سونف کی چائے نہایت مفید ہے۔ سونف میں موجود تیل بدہضمی اور پیٹ کو پھولنے سے بچاتا ہے۔

دارچینی :

دارچینی میں قدرتی طور پر اینٹی ایسڈ خصوصیات موجود ہیں جو ہاضمہ بہتر بناتی ہیں ۔ تکلیف سے نجات کے لیے دارچینی کی چائے پئیں جو پیٹ کا انفیکشن جلد ختم کردے گی۔

چھاج:

چھاج کو آیوریدک علاج میںخاص اہمیت حاصل ہے ۔اس لئے جب بھی مرغن غذا کھائیںتو اینٹی ایسڈ لینے کے بجائے ایک گلاس چھاج کا پی لیںزیادہ بہتر نتائج کے لئے پسی کالی مرچ یا ہرا دھنیا پیس کر ملا لیں۔

گڑ:

گڑ میں میگنیشیئم وافرمقدار میں موجود ہے جو نظام ہضم کو قوت بخشتی ہے اورتیزابیت کو ختم کرتی ہے۔کھانے کے بعد گڑ کا چھوٹا سا ٹکڑا منہ رکھ کر چوسیں۔گڑ جسم کے درجہ حرارت کو بھی کم کرتا ہے اور تیزابیت کو دور کرتا ہے اس لئے ماہرین گرمی میں گڑ کا ٹھنڈاشربت پینے کا مشور ہ دیتے ہیں۔

لونگـ:

چینی طب اور آیورید ک میں ہاضمے کی خرابی دور کرنے کے لئے لونگ کا استعمال کیا جاتا ہے ۔لونگ پیٹ میں بننے والی گیس کو ختم کرتی ہے اس لئے لوبیا،پھلیاں اور کالے چنے بناتے وقت اس میںلونگ پیس کر ڈالیں تاکہ گیس نہ بنے۔تیزابیت سے بچنے کے لئے برابر کی مقدار میں پسی ہوئی الائچی اور لونگ بھی کھائی جا سکتی ہے ۔تیزابیت ختم کرنے کے ساتھ یہ منہ کی بدبو بھی ختم کرے گی۔

ٹھنڈا دودھ:

دودھ میں کیلشیئم کی موجودگی معدے میں تیزابیت سے بچاتی ہے۔جب بھی تیزابیت محسوس ہوٹھنڈا دودھ پیئں۔

ناریل کا پانی:

جب ہم ناریل کا پانی پیتے ہیں تو جسم کا پی ایچ لیول الکلائن میں تبدیل ہو جاتا ہے جو معدے میں ایک طرح کا لعاب بناتا ہے جو معدے کو تیزابی اثرات سے محفوظ رکھتا ہے۔ناریل کے پانی میں موجود فائبر ہاضمہ درست کرکے معدے کو تیزابیت سے بچاتا ہے۔

زیرہ:

زیرہ ہاضمہ درست کرتا ہے،پیٹ کے درد میں آرام دیتا ہے اورتیزابیت کے اثرات کو ختم کرتا ہے۔زیرہ بھون کرکوٹ لیں اور ایک گلاس پانی میںملا کر پئیںیا ایک چمچ زیرہ ایک کپ ابلے ہوئے پانی میں ڈال کر رکھ دیںاور ہر کھانے کے بعد پیئیں۔

The post معدے میں تیزابیت کے فوری گھریلو علاج appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
معدے کا السرعلامت،اسباب و علاج https://htv.com.pk/ur/health/stomach-ulcer-causes-cure Wed, 05 Apr 2017 07:51:58 +0000 http://htv.com.pk/ur/?p=20405

معدے میں زخم ہو جائے تو اسے السر(Ulcer) کہا جاتا ہے۔ السر زیادہ تر حساس اور چٹ پٹی غذا کھانے کے شوقین افراد کو متاثر کرتا ہے اور ان عناصر سے السر کی تکلیف میں اضافہ ہوتا ہے۔ اگر معدے میں تیزابیت بڑھ گئی ہو تو سینے میں جلن رہتی ہے، منہ میں دانے نکل […]

The post معدے کا السرعلامت،اسباب و علاج appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>

معدے میں زخم ہو جائے تو اسے السر(Ulcer) کہا جاتا ہے۔ السر زیادہ تر حساس اور چٹ پٹی غذا کھانے کے شوقین افراد کو متاثر کرتا ہے اور ان عناصر سے السر کی تکلیف میں اضافہ ہوتا ہے۔

اگر معدے میں تیزابیت بڑھ گئی ہو تو سینے میں جلن رہتی ہے، منہ میں دانے نکل آتے ہیں اور خالی پیٹ ہونے پر سینے کی جلن زیادہ ہو جاتی ہے۔

السر کی علامت

معدے کی خرابی میں سب سے پہلے بدہضمی کی علامت ظاہر ہوتی ہے۔
بھوک نہیں لگتی ایک وقت کھانے کے بعد دوسرے وقت یونہی لگتا ہے جیسے کھانا پیٹ میں ہی رکھا ہوا ہے۔
کھانے کے بعد پیٹ پُھول جاتا ہے۔ کھٹی کھٹی ڈکاریں آتی ہیں۔ متلی کے ساتھ ساتھ منہ میں کھٹا پانی بھر جاتا ہے۔ سینے پر بوجھ محسوس ہوتا ہے، پیٹ میں ہلکا ہلکا درد اور کبھی کبھار مروڑ کے بعد موشن آتا ہے۔
قبض کی شکایت رہنے لگتی ہے اور پیٹ سخت ہو جاتا ہے۔
اگر معدے میں تیزابیت بڑھ گئی ہو تو سینے میں جلن رہتی ہے، منہ میں دانے نکل آتے ہیں اور خالی پیٹ ہونے پر سینے کی جلن زیادہ ہو جاتی ہے۔
دردقولیج کی صورت میں ناف کے مقام پر درد رہتا ہے جبکہ بڑی آنت میں سوزش ہو تو ناف کے نیچے درد کی لہریں سی محسوس ہوتی ہیں۔
Ulcer symptoms and cure image

السر کی وجوہات

٭ آنتوں اور معدے کے اوپر ٹشوز کی تہہ بچھی ہوتی ہے جو ان اعضاء کی حفاظت کرتی ہے ۔ اس پرہیلی کوبیٹر نامی بیکٹیریا رہتا ہے ۔ یہ ویسے تو کوئی نقصان نہیں پہنچاتا لیکن اس کے باعث معدے کی اندرونی تہہ میں سوجن آسکتی ہے جس کی وجہ سے السر ہوسکتا ہے ۔
٭ درد دور کرنے والی ادویات کا دیرپا استعمال السر کا سبب بن سکتا ہے ۔ ایسپرن سمیت دیگر درد دور کرنے والی ادویات بنا ڈاکٹر کے مشورے کے زیادہ عرصے تک کھانا پیپٹک السر پیدا کر سکتا ہے ۔
٭ دیگر کئی ادویات کا استعمال جیسے اسٹیرائڈز وغیرہ کے بھی ایک لمبے عرصے تک استعمال سے السر ہونے کے خطرات بڑھ جاتے ہیں ۔

السر کے اثرات

دائمی سر درد٭
درد شقیقہ٭
نظر کی کمزوری٭
دائمی قبض٭
بواسیر٭
آنتوں کی کمزوری٭
پٹھوں کی کمزوری٭
جسمانی کمزوری٭

پرہیز و احتیاط

روزانہ صبح شام چہل قدمی ضرور کریں۔٭
مُرغن اور بازار کے کھانوں سے پرھیز کریں۔٭
کھانا ہمیشہ بُھوک رکھ کر کھائیں۔٭
سادہ اور متوازن غذا کھائیں۔٭
لال مرچ سے مکمل پرہیز کریں۔٭
صبح شام دودھ یا دہی یا شربت میں اسپغول کا چھلکا ملا کر استعمال کریں۔٭
صبح شام ایک چمچہ شہد اور دوچمچ زیتون کا تیل ملا کر استعمال کریں۔٭
زیادہ گھی اور تیل والی تلی ہوئی اشیاء سے پرہیز کریں۔٭
زیادہ تیز چائے، کافی اور کولا ڈرنکس سے پرہیز کریں۔٭
معدہ کے السرکے حامل افراد کیلئے لائم جوس مفید ثابت ہوتاہے۔٭
بکری کا تازہ دودھ السر کے مریضوں کیلئے شافی غذا ہے، دن رات کم از کم تین بار نوش کیا جائے۔٭
گوبھی کا جوس دن میں مختلف وقفوں میں پینے سے شفاء ملتی ہے۔٭

مزید جانئے: بدہضمی اور گیس معمولی مرض نہیں

The post معدے کا السرعلامت،اسباب و علاج appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
قدرتی مشروبات جگر اور معدے کے لیے مفید https://htv.com.pk/ur/nutrition/juices-good-for-stomach-and-liver Fri, 04 Mar 2016 11:44:16 +0000 http://htv.com.pk/ur/?p=13426

موسم گرما کی آمد کے ساتھ ساتھ ہی بے اختیار ٹھنڈی ٹھنڈی چیزیں کھانے پینے کو دل چاہتا ہے۔بالخصوص لسّی، شیک اور مشروبات وغیرہ۔ یہاں ہم آپ کو چند ایسے مشروبات کے متعلق بتارہے ہیں جو مشروبات آپ کے جگر اور معدے کو تقویت فراہم کریں گے اور یقیناًآپ کے لیے فرحت بخش ثابت ہوں […]

The post قدرتی مشروبات جگر اور معدے کے لیے مفید appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>

موسم گرما کی آمد کے ساتھ ساتھ ہی بے اختیار ٹھنڈی ٹھنڈی چیزیں کھانے پینے کو دل چاہتا ہے۔بالخصوص لسّی، شیک اور مشروبات وغیرہ۔ یہاں ہم آپ کو چند ایسے مشروبات کے متعلق بتارہے ہیں جو مشروبات آپ کے جگر اور معدے کو تقویت فراہم کریں گے اور یقیناًآپ کے لیے فرحت بخش ثابت ہوں گے۔

شربتِ لیموں

لیموں کی سکنجبین موسمِ گرما کے لیے بہترین مشروب ہے،جو معدہ کی اصلاح کے علاوہ جسم کی گرمی بھی دور کرتی ہے۔ قدرت نے لیموں کو وافر غذائی اجزاء سے سرفراز کیا ہے۔ اس میں پچاس فیصد تو پانی ہے اس کے علاوہ لحمی اجزاء، چکنائی اور نشاستہ داراجزاء (پروٹین) بھی ہیں۔ لیموں خون کی صفائی کے لیے مفید ہے۔ پھوڑے پھنسیوں اور خارش میں بھی فائدہ مندہے۔ قے اور متلی میں لیموں کاٹ کر نمک لگاکر چاٹنے سے فائدہ ہوتا ہے۔ لیموں برسات کے عوارض کا مؤثر ترین علاج ہے۔اس موسم میں لیموں روزانہ استعمال کیا جائے تو انسان مختلف عوارض اور امراض کی یلغار سے محفوظ رہتا ہے۔

شربتِ فالسہ

کھٹا میٹھافالسہ خواتین اور بچوں میں زیادہ پسند کیا جاتا ہے۔ اس کا مزاج سرد اور خشک ہے۔ فالسہ دل، جگر اور معدے کو طاقت دیتا ہے۔ بالخصوص گرم مزاج والے افراد کے لیے یہ بہت مفید ثابت ہو تا ہے۔ پتّے کی خرابی سے پیدا ہونے والے عوارض، پیچش، قے،اسہال، ہچکی اور پیاس کی زیادتی میں بہت ہی فوائد کا حامل پھل ہے۔پیشاب کی جلن کو دور کرتا ہے اور گرمی کی وجہ سے بے ترتیب ہونے والی دھڑکنوں کو اعتدال پر لاتا ہے۔ جسمانی غیر ضروری گرمی کو ختم کرتا ہے۔ صفراوی شوگر کے مریضوں کے لیے خدا کی ایک بہت بڑی نعمت ہے۔ شوگر کو کنٹرول کرنے میں مدد کرتا ہے۔ پیاس کو تسکین دیتا ہے اور گھبراہٹ دور کرتا ہے۔ تازہ فالسوں کو پانی میں ملاکر اور پانی چھان کر بہ طریق عام شربت تیار کیا جاتا ہے۔

شربتِ الائچی

الائچی ایک خوشبو دار پھل ہے اور تقریباً ہر گھر کے باورچی خانے میں موجبود ہوتی ہے۔ اس کا مزاج گرم و خشک ہے۔ طبیعت میں لطافت پیدا کرتی ہے اور منہ و پسینے کی بد بو کو خو شبو میں بدلتی ہے۔ دل اور معدے کو طاقت فراہم کرتی ہے۔ تبخیر سے پیدا ہونے والے سر درد اور مرگی سے نجات دلاتی ہے۔ متلی، قے، ابکائی اور اسہال کو روکتی ہے۔ شربتِ الائچی کو شربتِ سکنجبین کے ساتھ ملا کر پینے سے عوارضِ جگر میں افاقہ ہوتا ہے۔منہ میں رکھ کر چبانے سے مسوڑھے مضبوط کرتی ہے۔ ہاضمے کی قوت میں اضافہ کرتی ہے۔گرمیوں میں شربتِ الائچی کا استعمال پسینے کی بدبو سے نجات دلاتا ہے۔ الائچی کو عرقِ گلاب میں رات بھر تر کر کے صبح ہلکا جوش دے کر بطریقِ عام شربت تیار کریں۔

شربتِ صندل

صندل کے درخت کی لکڑی کے برادے سے بنایا جاتا ہے۔صندل کا مزاج سرد اور خشک ہوتا ہے۔ یہ دل و دماغ کو فرحت و تازگی بخشتا ہے اور معدہ و جگر کو طاقت دیتا ہے۔ صندل خون کو صاف بھی کرتی ہے۔ لہٰذا گرمی دانوں سے بچانے میں بھی معاون ہے۔ صند ل کا شربت دل کی گھبراہٹ اور جگر و معدے کی گرمی کو دور کرتا ہے اور گرمی کی وجہ سے ہو نے والے دردِ سر کو تسکین دیتا ہے۔ یہ صندل کے برادے کوعرقِ گلاب میں بھگو کر بنایا جاتا ہے۔

شربتِ انار

انارچوں کہ موسمی پھل ہے اور خاص مدت کے بعد ختم ہوجاتا ہے اسی لیے اس کا شربت بنا کر پورا سال اس کے طبی فوائد سے استفادہ کیا جاتا ہے۔مزاج کے حوالے سے انار سرد تر ہے۔ اس میں ہیمو گلوبن کی کافی مقدار پائی جاتی ہے یہی وجہ ہے کہ شفاف خون بہت زیادہ پیدا کرنے کا ذریعہ بنتا ہے۔کمزورافراد کے جسم کو فربہ کرتا ہے۔ خون میں گرمی کے باعث ہونے والی خارش کو ختم کرتا ہے۔ گرمی کی شدت سے پیدا ہونے والی پیاس کو تسکین دیتا ہے۔گھبراہٹ اور بے چینی کو ختم کرتا ہے۔

شربتِ بنفشہ

بنفشہ ایک پھول دار پودا ہے اور اپنی ادویاتی خصوصیات کی وجہ سے بڑی اہمیت کا حامل ہے۔ بنفشہ کو نزلہ و زکام کے لیے استعمال ہونے والے جوشاندوں میں عام شامل کیا جاتا ہے۔ یہ گرمی کی زیادتی سے ہونے والے نزلے، زکام اور بخار کا بہترین علاج ہے۔

The post قدرتی مشروبات جگر اور معدے کے لیے مفید appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>