ذہن و بدن – ایچ ٹی وی اردو https://htv.com.pk/ur Fri, 25 Mar 2022 08:10:29 +0000 en-US hourly 1 https://htv.com.pk/ur/wp-content/uploads/2017/10/cropped-logo-2-32x32.png ذہن و بدن – ایچ ٹی وی اردو https://htv.com.pk/ur 32 32 مشروم کا حیرت انگیز فائدہ معلوم ہے؟ https://htv.com.pk/ur/mind-body/mushroom-benefit Tue, 22 Oct 2019 07:33:26 +0000 https://htv.com.pk/ur/?p=34499 mushroom

ویسے تو دیگر قدرتی اجزاء کی طرح مشرومز کے بھی ڈھیر سارے طبی فوائد ہیں،یہ جہاں کینسر کے اثرات کم کرنے میں مدد دیتے ہیں،وہیں انسانی جسم کو توانائی فراہم کرنے والے وٹامنز سے بھی بھرپور ہیں۔تاہم ایک حالیہ تحقیق سے ثابت ہوا ہے کہ مشروم ڈپریشن اور انزائٹی کے مرض کو کم کرنے میں […]

The post مشروم کا حیرت انگیز فائدہ معلوم ہے؟ appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
mushroom

ویسے تو دیگر قدرتی اجزاء کی طرح مشرومز کے بھی ڈھیر سارے طبی فوائد ہیں،یہ جہاں کینسر کے اثرات کم کرنے میں مدد دیتے ہیں،وہیں انسانی جسم کو توانائی فراہم کرنے والے وٹامنز سے بھی بھرپور ہیں۔تاہم ایک حالیہ تحقیق سے ثابت ہوا ہے کہ مشروم ڈپریشن اور انزائٹی کے مرض کو کم کرنے میں بھی مددگار ہوتے ہیں۔

سائنس جرنل نیچر میں شائع ہونے والے ایک مضمون کے مطابق لندن کے امپریل کالج کے ماہرین کی جانب سے کی گئی ایک تحقیق میں مشروم کا ڈپریشن اور انزائٹی کے شکار افراد کی صحت پر پڑنے والے اثرات کا جائزہ لیا گیا۔ماہرین نے تجربے کے لیے رضاکاروں کے ایک گروپ کو مشروم سے تیار میڈیسن دینا شروع کی۔طبی ماہرین نے گروپ کے رضاکاروں کو ابتداء میں مشروم سے تیار کردہ میڈیسن کی بہت ہی کم مقدار یعنی 10 ملی گرام دی، لیکن بعد ازاں اسے بڑھا کر ہفتہ وار 25 ملی گرام کردیا گیا۔

یہ بھی جانئے نوجوانوں میں ڈپریشن کی10وجوہات 


تحقیق دانوں نے رضاکاروں کو میڈیسن دینے سے پہلے ان کے ذہن کا اسکین کرکے دماغ کا جائزہ بھی لیا۔تجربے کے نتائج سے معلوم ہوا کہ تمام افراد پر مشروم سے تیار شدہ دوائی نے بہتر اثرات مرتب کیے،البتہ کم مقدار والے افراد پر اس کے اثرات تاخیر جب کہ زیادہ دوائی لینے والے افراد پر جلد مرتب ہوئے۔ماہرین نے تجربہ مکمل ہونے اور رضاکاروں کو دوائی دینے کے بعد ایک بار پھر ان کے ذہن کا اسکین کیا اور دماغ کا جائزہ لیا۔

ماہرین کے مطابق مشروم استعمال کرنے والے تمام افراد کے ذہن کا وہ حصہ جو جذبات کے حوالے سے کام کرتا ہے، وہ بہتر انداز میں کام کرنے لگ گیا۔ماہرین کے مطابق مشروم استعمال کرنے کے بعد انسانی ذہن کے اس حصے میں خون کا دباؤ کم ہوگیا، جو ڈپریشن یا انزائٹی کے وقت تیز ہوجاتا ہے۔خیال رہے کہ ڈپریشن اور انزائٹی اس وقت تیزی سے بڑھنے والا مرض ہے، اس کے شکار افراد کا تعلق دنیا کے تمام خطوں اور تمام طبقوں سے ہے۔

انزائٹی جسے اردو میں گھبراہٹ،پریشانی،خوف،اضطراب یا ڈر وغیرہ کہتے ہیں، وہ بظاہر کوئی بڑی بیماری نہیں لگتی،مگر اس کا شمار خطرناک ترین بیماریوں میں ہوتا ہے۔اسی طرح ڈپریشن کا مرض بھی بظاہر چھوٹا نظر آتا ہے،مگر اس کے اثرات پوری زندگی پر مرتب ہوتے ہیں۔ڈپریشن یا انزائٹی کے شکار ذیادہ ترافراد اس خوف سے بھی علاج نہیں کرواتے کہ لوگ کہیں انہیں پاگل نہ سمجھ لیں،کیونکہ یہ دونوں ذہنی بیماریاں ہی ہیں۔


اسٹگمااورذہنی مریضوں پر اس کے اثرات


The post مشروم کا حیرت انگیز فائدہ معلوم ہے؟ appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
ذہنی دباؤ سے نکلنا کے لئے یہ اقدامات کیجئے https://htv.com.pk/ur/mind-body/to-get-rid-from-anxiety Fri, 11 Oct 2019 10:11:16 +0000 https://htv.com.pk/ur/?p=34424 to-get-rid-from-anxiety

بے چینی کا احساس رہنا ، چھوٹی چھوٹی باتوں پر غصہ آجانا اور تھوری دیر میں ٹھنڈا ہوجانا، احساس کمتری کا احساس ہونا ، بار بار دھوکے کا خوف رہنا، شک کا بڑھ جانا، بے وجہ کسی پر چلّانا اور اپنی بھڑاس کسی اور پر نکال دینا اور بعد میں پچھتانا۔ یہ علامتیں ظاہر کرتی […]

The post ذہنی دباؤ سے نکلنا کے لئے یہ اقدامات کیجئے appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
to-get-rid-from-anxiety

بے چینی کا احساس رہنا ، چھوٹی چھوٹی باتوں پر غصہ آجانا اور تھوری دیر میں ٹھنڈا ہوجانا، احساس کمتری کا احساس ہونا ، بار بار دھوکے کا خوف رہنا، شک کا بڑھ جانا، بے وجہ کسی پر چلّانا اور اپنی بھڑاس کسی اور پر نکال دینا اور بعد میں پچھتانا۔ یہ علامتیں ظاہر کرتی ہیں کہ آپ ذہنی دباؤ میں مبتلا ہیں۔یہاں ہم آپ کے سامنے سات چند ایسے آسان طریقے پیش کررہے ہیں، جنہیں اپناكر آپ اپنا ذہنی دباؤ کسی حد تک کم کرسکتے ہیں اور اس پر قابو پاسکتے ہیں لیکن اگر یہ معاملہ کسی طور پر بہتر نہیں ہو پارہا ہے آپ فوری طور پر کسی ذہنی دباؤ کے ڈاکٹر (psychiatrist) سے رجوع کریں۔

ہنسئے اور مسکرائیے :

ہنستے مسکراتے رہیں، کیونکہ مسکراہٹ ہی واحد ایسی چیز ہے جو آپ کے سارے دکھ درد دور کر سکتی ہے۔ اگر آپ کسی مشکل وقت و مرحلے سے گزر رہے ہیں تو اس صورتحال میں آپ کی ایک مسکراہٹ آپ کے سارے غم بھُلا دے گی۔ اس سے آپ کو غصہ کم آئے گا اور آپ کو ہمیشہ مثبت سوچنے کی عادت پڑ جائے گی۔ یاد رکھئے ہر مثبت سوچ کبھی آپ کو ہارنے نہیں دیتی ، بلکے آپ ہار کر بھی جیت جاتے ہیں۔

ہاتھوں کو رگڑیں:

جب آپ کو محسوس ہو کہ آپ کو غصہ آ رہا ہے، تو اپنے ہاتھوں کو ایک دوسرے کے ساتھ رگڑیں۔ایسا کرنے سے آپ کے ہاتھ گرم ہوں گے اور غصے کے وقت نروس سسٹم میں تیزی سے بڑھتا خون کا بہاؤ سست ہوجائے گا۔آپ نے محسوس کیا ہوگا کہ جب آپ کو اچانک غصہ آتا ہے تو آپ کا پورا جسم گرم ہو جاتا ہے۔ دراصل اس دوران پورے جسم میں خون کا بہاؤ بہت تیز ہونے لگتا ہے۔ اسی کیفیت کو کنٹرول کرنے کے لیے جب بھی آپ کو غصہ آتا محسوس ہو تو ہاتھوں کو رگڑنا شروع کر دیجیے۔


یہ بھی جانئے نوجوانوں میں ڈپریشن کی10وجوہات


محبت اپنے اندر تلاش کریں اور خود سے کریں:

غصہ اسی وقت آتا ہے جب آپ کو کوئی بات بُری لگتی ہے، اور ایسی کیفیت اسی وقت طاری ہوتی ہے جب ذہن پر منفی خیالات کا غلبہ ہوجاتا ہے۔اس کیفیت سے بچنے کے لیے اپنے آپ سے محبت کریں، اپنے مثبت انداز سے سوچیں کیونکہ منفی سوچ ہمیشہ آپ کے بلڈ پریشر میں اضافہ کردیتی ہے، جس سے ذہنی تناؤ کا باعث بنتا ہے جو غصہ کا موجب ہوتا ہے۔ غصہ آرہا ہو تو فوری طور پر لمبی لمبی سانس لیں اور دن میں ہوئی کوئی اچھی چیز یاد کرلیں یا اگرآئینہ موجود ہے تو فوری طور پر آئینے کے سامنے کھڑے ہوکر اپنے آپ سے بات کریں یہ فوری طور پر آپ کوریلکس کرتا ہے۔

حقوق العباد کے کام سر انجام دیں :

اپنے کسی اچھے جذبے اور کام سے کسی دوسرے انسان کے چہرے پر خوشی دیکھنا، دنیا کا سب سے انمول احساس ہے۔ کسی غریب اور ضرورت مند کو چیزیں دے کر یہ احساس آپ نے ضرور محسوس کیا ہوگا۔ اگر نہیں کیا تو آج سے ہی یہ کام شروع کردیں۔ ایسا کرکے آپ نہ صرف کسی ضرورتمند کی مدد کرتے ہیں، بلکہ خود پر بھی احسان کرتے ہیں اور پھر کسی کی دعا بھی انتہائی اثر رکھتی ہے جو خوشی و سکون کا باعث بنیں گی۔

شجر کاری سے جڑ ُجائیں:

ہالینڈ میں کی گئی ریسرچ کے نتائج کے مطابق پودوں کی دیکھ بھال میں آدھا گھنٹہ صرف کرنے سے ذہنی دباؤ سے اتنی ہی نجات ملتی ہے جس قدر ایک پُرسکون کمرے میں کسی دلچسپ کتاب کا مطالعہ کرنے سے راحت ملتی ہے۔ایک دوسری ریسرچ سے یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ پودوں کی دیکھ بھال کے دوران مٹی میں موجود ایسے عناصر سے آپ کا واسطہ پڑتا ہے، جس سے ذہنی دباؤ میں کمی آتی ہےاور آپ کو بہتر طریقے سے اپنے کام پر توجہ مرکوز ہوجاتی ہے۔ یا پھر ایسی کوئی بھی ایکٹویٹی انجام دیجئے جس سے آپ کو سکون ملتا ہو وہ کوئی کھیل کی سرگرمی ہو یا پھر پالتو جانور کی دیکھ بھال۔


اس بارے میں جانئے :10عادتیں جوکامیاب لوگ کبھی نہیں اپناتے


 

The post ذہنی دباؤ سے نکلنا کے لئے یہ اقدامات کیجئے appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
اسٹگمااورذہنی مریضوں پر اس کے اثرات https://htv.com.pk/ur/mind-body/stigma-patient Thu, 03 Oct 2019 09:21:24 +0000 https://htv.com.pk/ur/?p=34354 Stigma

اسٹگما کے اثرات جاننے سے پہلے یہ جاننا ضروری ہے کہ اسٹگما کیا ہے؟جب کسی شخص کو اس کی کسی خامی (جیسے رنگت،کوئی عیب،معذوری یا ذہنی بیماری کی وجہ سے )منفی نظر سے دیکھا جائے تو یہ چیز اسٹگما کہلاتی ہے ۔ اسٹگما اس وقت ہوتا ہے جب ایک شخص کسی کو اس کی شخصیت […]

The post اسٹگمااورذہنی مریضوں پر اس کے اثرات appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
Stigma

اسٹگما کے اثرات جاننے سے پہلے یہ جاننا ضروری ہے کہ اسٹگما کیا ہے؟جب کسی شخص کو اس کی کسی خامی (جیسے رنگت،کوئی عیب،معذوری یا ذہنی بیماری کی وجہ سے )منفی نظر سے دیکھا جائے تو یہ چیز اسٹگما کہلاتی ہے ۔
اسٹگما اس وقت ہوتا ہے جب ایک شخص کسی کو اس کی شخصیت کی خوبی کے بجائے اس کی بیماری کے ذریعے متعارف کرائے۔
ایسے لوگ جو ذہنی مسائل کا شکار ہوتے ہیں، معاشرے کی طرف سے ملنے والی رسوائی ان کی بیماری کو مزید بڑھا دیتی ہے اور ان کا صحیح ہونا زیادہ مشکل ہو جاتا ہے۔کیونکہ ایسے مریض رسوائی کے ڈر سے علاج کراتے ہوئے ڈرتے ہیں۔

اسٹگما کے مضر اثرات :

۔شرمندگی،ناامیدی اور اکیلے پن کا احساس
۔علاج کے لئے کسی سے مدد لینے میں ہچکچاہٹ ہونا
۔گھر والوں،دوستوں اور دوسرے لوگوں سے دوری محسوس ہونا
۔روزگار اور معاشرتی تعلقات کے ذرائع کم ہو جانا
۔خوف زدہ ہونا اور خود کو جسمانی تکلیف پہنچانا
۔یہ یقین ہوجانا کہ میں کبھی ٹھیک نہیں ہو پائوں گا یا زندگی میں وہ چیز حاصل نہیں کر پائوں گا جو میں حاصل کرنا چاہتا ہوں ۔


اس بارے میں جانئے :10عادتیں جوکامیاب لوگ کبھی نہیں اپناتے


اسٹگما سے کس طرح نمٹیں:

علاج کرائیں :

آپ کو جس علاج کی ضرورت ہے وہ ضرور کرائیں ۔اور اس بات سے ہرگز نہ ڈریں کہ آپ پر ذہنی مریض کا لیبل لگ جائے گا ۔

کسی کا یقین نہ کریں :

بعض اوقات جب کوئی بات بہت زیادہ دیکھی یا سنی جاتی ہے تو آپ اس پر یقین بھی کرنے لگتے ہیں ۔لوگوں کی لا علمی کا اپنی ذات پر غلط اثر نہ پڑنے دیں ۔ذہنی بیماری کوئی کمزوری نہیں ہوتی اور ایسا بہت کم ہوتا ہے کہ اس سے آپ خود نہ نمٹ سکیں۔ذہنی صحت کے ماہر سے رابطہ کرکے آپ اپنی بیماری پر قابو پاکر بہت جلد صحت یاب ہو سکتے ہیں ۔

کسی سے نہ چھپیں:

ذہنی بیماری میں مبتلا بہت سے لوگ خود کو دنیا سے بالکل الگ تھلگ کرلینا چاہتے ہیں ۔ایسے لوگوں سے تعلق قائم کریں جن پر آپ بھروسہ کرتے ہیں ۔جیسے گھر والے،دوست یا مذہبی پیشوا وغیرہ۔اس سے آپ کو اپنے علاج میں بہت مدد ملے گی۔

دوسروں سے تعلق قائم کریں :

اپنے جیسے لوگوں سے بھی تعلق قائم کریں۔اس طرح آپ کو پتہ چلے گا کہ اس دنیا میں صرف آپ ہی تنہا نہیں بلکہ آپ جیسے اور بھی بہت سے لوگ ہیں۔

خود کو اپنی بیماری کے حوالے سے متعارف نہ کرائیں :

دوسرے لوگوں کی طرح آپ خود کو اپنی بیماری سے متعارف نہ کرائیں ۔خود کو ذہنی مریض کہنے کے بجائے کہیں کہ میں ذہنی بیماری میں مبتلا ہوں۔الفاظ میں اس طرح کی تبدیلی کافی پر اثر ثابت ہوتی ہے۔

ہر چیز آپ کی ذات سے متعلق نہیں ہو سکتی:

یاد رکھئے دوسرے لوگ صرف اپنی لاعلمی کی بناء پر آپ کے بارے میں اپنی رائے قائم کر لیتے ہیں۔اور جب وہ آپ کو اچھی طرح جان جاتے ہیں تو ان کی یہ رائے بدل بھی جاتی ہے لہٰذا ان کے خیالات کو اپنی ذات پر نہ لیں ۔


یہ بھی جانئے نوجوانوں میں ڈپریشن کی10وجوہات

The post اسٹگمااورذہنی مریضوں پر اس کے اثرات appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
وہ علامات جو فولک ایسڈ کی کمی بیان کرتی ہیں https://htv.com.pk/ur/mind-body/folic-acid-ki-kami-ki-alamaat Thu, 08 Aug 2019 07:10:40 +0000 https://htv.com.pk/ur/?p=33952 folic acid

ہر بالغ فرد کو روزانہ 400 مائیکرو گرام فولک ایسڈ جزو بدن بنانا چاہئے اور یہ صحت مند انسان کی علامتوں میں سے ایک علامت ہے۔فولک ایسڈ یا وٹامن بی نائن صحت کے لیے انتہائی اہم ہے جو کہ ڈی این اے کی مرمت، خون کے سرخ خلیات کی پیداوار سمیت متعدد اہم افعال میں […]

The post وہ علامات جو فولک ایسڈ کی کمی بیان کرتی ہیں appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
folic acid

ہر بالغ فرد کو روزانہ 400 مائیکرو گرام فولک ایسڈ جزو بدن بنانا چاہئے اور یہ صحت مند انسان کی علامتوں میں سے ایک علامت ہے۔فولک ایسڈ یا وٹامن بی نائن صحت کے لیے انتہائی اہم ہے جو کہ ڈی این اے کی مرمت، خون کے سرخ خلیات کی پیداوار سمیت متعدد اہم افعال میں مدد دیتا ہے۔اگر جسم میں فولک ایسڈ کی کمی ہو تو مخصوص علامات بلکہ اینیما جیسے مرض کا سامنا بھی ہوسکتا ہے۔اینیمیا یا خون کی کمی کے دوران جسم کے اندرونی اعضاءکو مناسب مقدار میں آکسیجن نہیں مل پاتی جس کے نتیجے میں وہ ٹھیک طرح کام نہیں کرپاتے۔

فولک ایسڈ کی کمی کی علامات مندرجہ ذیل ہیں:

 

جلد پر پیلاپن

ہیموگلوبن ایک پروٹین ہے جو کہ خون کے سرخ خلیات کے لیے ضروری ہے، جب جسم میں فولک ایسڈ کی کمی ہوتی ہے تو اس کے اندر خون کے سرخ خلیات اور ہیموگلوبن کی سطح کم ہوجاتی ہے، اس کے نتیجے میں مسلز کی کمزوری، تھکاوٹ، ہاتھوں اور پیروں کا سن ہونا اور جلد کی پیلاہٹ کا سامنا ہوتا ہے۔

ذہنی مسائل کا سامنا

فولک ایسڈ مرکزی اعصابی نظام کے لیے انتہائی اہم جز ہے، اگر جسم میں اس کی کمی ہو تو آپ کو ڈپریشن کا سامنا ہوسکتا ہے، خیالات مرکوز کرنے میں مشکل ہوسکتی ہے جبکہ چیزیں بھولنے کے ساتھ چڑچڑے پن کا بھی سامنا ہوسکتا ہے۔ اگر اس کمی پر قابو نہ پایا جائے تو سنگین امراض جیسے ڈیمینشیا یا الزائمر کا خطرہ بھی لاحق ہوسکتا ہے۔

جسم میں درد ہونا

فولک ایسڈ کی کمی سے اینیما لاحق ہونے پر دماغ کو آکسیجن کم ملتی ہے، اس کے ردعمل میں دماغی شریانیں سوجنے لگتی ہیں اور سردرد کی شکایت ہوتی ہے، صرف دماغ کو ہی اس مسئلے کا سامنا نہیں ہوتا بلکہ جسم کے دیگر حصوں کو بھی آئرن کی کمی کے نتیجے میں مسائل پیش آتے ہیں خصوصاً سینے اور ٹانگوں میں درد کا سامنا پیش آسکتا ہے۔

سانس لینے میں مشکل پیش آنا

اگر آپ غورکریں کہ ایسے کام جو پہلے آرام سے کرلیتے تھے مگر اب انہیں کرتے ہوئے سانس پھول جاتا ہے، تو اس کا مطلب ہے کہ جسم کے اندر خون کے سرخ خلیات کی کمی کے باعث آکسیجن کی کمی ہورہی ہے، سانس پھولنے سے ہٹ کر دھڑکن کی رفتار تیز ہونا یا غشی کا احساس بھی دیگر علامات ہیں۔

منہ میں چھالے ہونا

یہ علامات عام طور پر اس وقت سامنے آتی ہیں جب فولک ایسڈ کی کمی بہت زیادہ ہوجائے۔ زبان اس صورت میں سوجی ہوئی، سرخ یا چمکدار نظر آسکتی ہے۔ خون کے سرخ خلیات کی کمی کے نتیجے میں نوالہ نگلتے ہوئے تکلیف کا احساس بھی ہوسکتا ہے۔


ذہن و بدن میں توازن قائم کرنے کے 10 اصول


ذائقے کی حس کا متاثر ہونا

مختلف طبی تحقیقی رپورٹس کے مطابق فولک ایسڈ کی کمی کے نتیجے میں کھانے کے ذائقے کو محسوس کرنے کی حس بھی متاثر ہوتی ہے کیونکہ یہ ریسیپٹر اعصابی نظام کے ذریعے دماغ کو سگنل نہیں بھیج پاتے۔

نظام ہاضمہ کا مسئلہ

دل متلانا، قے ہونا، پیٹ میں درد اور کھانے کے بعد ہیضہ عام طور پر جسم میں فولک ایسڈ کی کمی کی ابتدائی علامات میں سے ایک ہوتی ہیں۔

فولک ایسڈ کی کمی کیسے پوری کریں؟

اچھی خبر یہ ہے کہ غذا کے ذریعے آسانی سے فولک ایسڈ کی کمی پوری کی جاسکتی ہے، جیسے سبز پتوں والی سبزیاں یعنی پالک یا ساگ وغیرہ کا استعمال زیادہ کریں۔

اسی طرح ترش پھل، بیج، مشروم اور اجناس کا زیادہ استعمال بھی فائدہ مند ہوتا ہے۔

اگر اوپر درج علامات کا سامنا ہو تو اپنے ڈاکٹر سے رجوع کرکے تشخیص ضرور کروائیں، تاکہ وہ غذائی عادات میں تبدیلی تجویز کرسکے۔


مراقبہ ؛ ذہن و بدن کو پرسکون بنائے


The post وہ علامات جو فولک ایسڈ کی کمی بیان کرتی ہیں appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
مراقبہ ؛ ذہن و بدن کو پرسکون بنائے https://htv.com.pk/ur/mind-body/meditation-benefits Fri, 28 Jun 2019 06:08:33 +0000 https://htv.com.pk/ur/?p=33406 meditation benefits

مراقبے سے مراد وہ حالت ہے جس میں کوئی بھی شخص اپنا ذہن کو یکسو کرکے کسی ایک خیال کی طرف اپنا توجہ مرکوز کرتا ہے یا پھر انتشار خیالی سے نجات حاصل کرنا چاہتا ہے۔روحانیت میں مراقبے سے مراد اللہ کا قرب حاصل کرنے کیلئے یکسو ذہن ہوکر روحانی استاد کی جانب سے تجویز […]

The post مراقبہ ؛ ذہن و بدن کو پرسکون بنائے appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
meditation benefits

مراقبے سے مراد وہ حالت ہے جس میں کوئی بھی شخص اپنا ذہن کو یکسو کرکے کسی ایک خیال کی طرف اپنا توجہ مرکوز کرتا ہے یا پھر انتشار خیالی سے نجات حاصل کرنا چاہتا ہے۔روحانیت میں مراقبے سے مراد اللہ کا قرب حاصل کرنے کیلئے یکسو ذہن ہوکر روحانی استاد کی جانب سے تجویز کردہ مشقیں سرانجام دینا ہے۔ اور عام طور پر مراقبہ کرنے والے افراد کو اخلاقی برائیوں سے نجات ملتی ہے اور اللہ پر یقین مستحکم ہوتا ہے۔ مراقبہ ذہنی دباو کے خاتمے میں بھی اہم کردار ادا کرتا ہے ۔

مراقبہ کرنے کیلئے درج ذیل طریقہ کار اختیار کریں۔

پرسکون جگہ کا انتخاب

مراقبے کیلئے پرسکون جگہ کا انتخاب کریں جہاں پر کسی کی مداخلت نہ ہو یا پھر کسی بھی قسم کی دوسری آوازیں یا پھر شور و شرابہ نہ آتا ہو۔ کانوں کو بھی ایئر پلگ لگا کر بند کرلیں۔


یہ بھی پڑھئے :ذہنی دباؤ کے انسانی جسم پر اثرات


پرسکون انداز میں نشست اختیار کریں

مراقبہ لیٹ کر یا بیٹھ کر کسی بھی انداز میں کیا جاسکتا ہے تاہم اسکے لئے پرسکون ہونا شرط ہے عام طور پر مراقبے کیلئے پالتی مار کر بیٹھنا تجویز کیا جاتا ہے لیکن اگر بے سکونی محسوس ہوتو ٹیک لگا دیوار سے بھی بیٹھا جاسکتا ہے۔

سانس پر توجہ

مراقبے میں سانس لینے کے عمل کو کنٹرول کرنا انتہائی اہم ہے کیونکہ اس سے انسانی جسم کو سکون حاصل ہوتا ہے۔ مراقبے کے دوران اپنی توجہ سانس پر بھی دیں اور ناک کے ذریعے پرسکون انداز میں سانس کو اندر اور باہر نکالیں ، اس دوران منہ
کو بند رکھیں۔

مراقبے میں توجہ مرکوز رکھنا

مراقبے کے دوران عام طور پر انتشار سے نجات یا پھر دباوسے نجات کیلئے توجہ کسی شے یا مرکز پر مرکوز کرنا ہوتی ہے ۔ عام طور پر ذہنی دباو کیلئے مراقبے کے دوران یہ تصور کیا جاتا ہے کہ آسمان سے نیلے رنگ کی روشنی اس شخص کے اندر جذب ہوکر زمین میں ارتھ ہورہی ہے۔

ذکر سے انتشار خیال کا خاتمہ

ذکر بھی ایک طرح سے انتشار خیالی کے خاتمے میں اہم کردار ادا کرتا ہے کیونکہ یہ بھی ایک طرح کا مراقبہ ہے جس میں کوئی بھی شخص اپنی توجہ اللہ کے ذکر یا پھر اس سے متعلق چند الفاظوں پر کرتا ہے۔ اس صورت میں ذہن کو دباو کا شکار کرنے والا خیال بھی دور ہوجاتا ہے۔


 اس بارے میں جانئے :10عادتیں جوکامیاب لوگ کبھی نہیں اپناتے


The post مراقبہ ؛ ذہن و بدن کو پرسکون بنائے appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>