متبادل علاج – ایچ ٹی وی اردو https://htv.com.pk/ur Wed, 04 Mar 2020 06:58:16 +0000 ur hourly 1 https://htv.com.pk/ur/wp-content/uploads/2017/10/cropped-logo-2-32x32.png متبادل علاج – ایچ ٹی وی اردو https://htv.com.pk/ur 32 32 اکوپنکچر ٹریٹمنٹ 6 طرح سے صحت کو بہتر بنائے https://htv.com.pk/ur/alternative-medicine/acupuncture-treatment-in-urdu Mon, 24 Dec 2018 06:56:45 +0000 https://htv.com.pk/ur/?p=29257 Acupuncture 24-12-18

موجودہ تیز رفتار زندگی میں اکثر لوگوں کو گھٹنوں اور جوڑوں کے درد کی شکایت ہوتی ہے۔ زیادہ تر لوگ اس درد سے نجات حاصل کرنے کے لیے تیز دوائوں کا استعمال کرتے ہیں، جبکہ کم نقصان دہ اور دوائوں کے بغیر علاج کو ہم اکثر نظر انداز کردیتے ہیں۔ ان طریقوں میں ایک طریقہ […]

The post اکوپنکچر ٹریٹمنٹ 6 طرح سے صحت کو بہتر بنائے appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
Acupuncture 24-12-18

موجودہ تیز رفتار زندگی میں اکثر لوگوں کو گھٹنوں اور جوڑوں کے درد کی شکایت ہوتی ہے۔ زیادہ تر لوگ اس درد سے نجات حاصل کرنے کے لیے تیز دوائوں کا استعمال کرتے ہیں، جبکہ کم نقصان دہ اور دوائوں کے بغیر علاج کو ہم اکثر نظر انداز کردیتے ہیں۔ ان طریقوں میں ایک طریقہ اکوپنکچر ہے۔ اکوپنکچر چینیوں کا روایتی طریقہ علاج ہے جس میں وہ درد اور دبائو کو کم کرنے کے لیے سوئیوں کے ذریعے علاج کرتے تھے ۔ اس میں مخصوص نروز پوائنٹس پر سوئیاں گھسائی جاتی ہیں ۔ اکوپنکچر کے فوائد میں سے ایک فائدہ یہ ہے کہ اس میں درد نہیں ہوتا۔ یہ طریقہ نروز کے کھنچائو اور دبائو سے متعلق علامات کو ختم کرنے کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔
اکوپنکچر کے کچھ طریقوں کے ذریعے صحت کو بہتر بنانے میں مدد مل سکتی ہے۔

میگرین اور سر درد کے علاج کے لیے :

اکوپنکچر کے ذریعے میگرین کا مکمل طور پر علاج تو نہیں کیا جاسکتا لیکن اس کی شدت کو کم ضرور کیا جاسکتا ہے۔ یہ ذہنی دبائو کی وجہ سے ہونے والے سر درد اور کھنچائو میں بھی آرام پہنچاتا ہے۔ سر درد اور ذہنی دبائو کم کر کے جسم کو سکون پہنچانے کے لیے بھی اکوپنکچر بہترین ٹریٹمنٹ مانا جاتا ہے۔

دوران حمل:

 

جسمانی کھنچاؤ اور لیبر پین کو کم کرنے کے لیے بھی اکوپنکچر کو مانا جاتا ہے ۔ اکوپنکچر ٹریٹمنٹ کے ذریعے ہارمونز کو متوازن کیا جاتا ہے نئی حاملہ خواتین میں بھی ڈپریشن اور موڈ کے علاج کے لیے اکوپنکچر ٹریٹمنٹ کیا جاسکتا ہے لیکن دوران حمل جسم کے کچھ حصوں پر اکوپنکچر کرنے سے گریز کرنا چاہیے اور اس کے لیے کسی ماہر اکوپنکچرسٹ کا انتخاب کیا جائے ساتھ ہی گائنی کولوجسٹ سے بھی مشورہ ضروری ہے۔

درد کی شدت کو کم کرتا ہے:

انسانی جسم کی مخصوص جگہوں پر سوئیاں گھسا کر کمر اور گردن کا درد کم کرنے میں مدد ملتی ہے۔ گٹھیا کے علاج میں بھی اکوپنکچر ٹریٹمنٹ کیا جاسکتا ہے۔ 2006 ءمیں کی گئی ایک تحقیق کے مطابق کمر کے نچلے حصے میں ہونے والے درد کا بھی اکوپنکچر کے ذریعے علاج کافی مفید ہے۔

مزید جانئے :کیا ایکوپنکچر کے ذریعے وزن کم کیا جا سکتا ہے؟

کیموتھراپی کے بعد :

کیموتھراپی کینسر کے سیلز کو ختم کرنے کے لیے کی جاتی ہے اور اس کے لاتعداد سائیڈ افیکٹس ہوتے ہیں۔ ان کے منفی اثرات کے علاج کے لیے بھی اکوپنکچر ٹریٹمنٹ کے ذریعے جسم کی توانائی واپس لائی جاسکتی ہے۔ اس سے جسم کی قوت مدافعت بڑھتی ہے جس سے مریض کو اس عرصے میں کم تکلیف ہوتی ہے۔

بے خوابی کا علاج:

اگر آپ کو نیند آنے میں مسئلہ ہوتا ہے اور نیند پوری نہ ہونے کی وجہ سے تھکن محسوس کرتے ہیں تو اکوپنکچر ٹریٹمنٹ کرواسکتے ہیں۔ تحقیق سے ثابت ہوا ہے کہ وہ لوگ جو باقاعدگی کے ساتھ اکوپنکچر تھیراپی کرواتے رہتے ہیں ان کی نیند کا معیار بہت بہتر ہوتا ہے اور انھیں آسانی سے نیند آجاتی ہے۔ اکوپنکچر کا ایک اضافی فائدہ یہ ہے بھی ہے کہ کیونکہ اس میں کوئی دوا استعمال نہیں ہوتی اس لیے اس کا کوئی سائیڈافیکٹ بھی نہیں ہوتا۔

اعصابی بیماری کا علاج:

عمر بڑھنے کے ساتھ ساتھ اعصاب کی کمزوری میںاضافہ ہوتا جاتا ہے لیکن اکوپنکچر کے ذریعے اعصاب کا دماغ سے تعلق قائم کیا جاتا ہے جس سے بیماری کے اثرات کافی حد تک کم کیے جاسکتے ہیں ۔ اکوپنکچر کے ذریعے پارکنسن کی وجہ سے ہونے والے نقصان جیسے رعشہ ، لرزہ اور ڈپریشن کو کم کیا جا سکتا ہے۔
اگر آپ کو کمر میں درد رہتا ہے یا نیند میں مسئلہ ہوتا ہے تو ان کے لیے اکوپنکچر کا علاج نہایت سازگار اور مفید طریقہ علاج ہے۔ اپنی تکلیف کے لیے کسی اچھے اکوپنکچرسٹ سے رابطہ کریں تاکہ پتہ چل سکے کہ ہمارا یہ آرٹیکل کس حد تک مفید ثابت ہوا ہے۔

انگریزی میں پڑھنے کے لئے کلک کریں 

تحریر  : سحرش قاضی

ترجمہ   : سعدیہ اویس


The post اکوپنکچر ٹریٹمنٹ 6 طرح سے صحت کو بہتر بنائے appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
6 طریقوں سے اوریگانوقوت مدافعت میں اضافہ کرتا ہے: https://htv.com.pk/ur/alternative-medicine/6-health-benefit-of-oregano-in-urdu Thu, 13 Sep 2018 11:48:36 +0000 https://htv.com.pk/ur/?p=30509 6 Health benefit of Oregano in Urdu

بحیرہ وم کے ساحلی علاقوں میں پائی جانے والی جڑی بوٹی اوریگانو کو اسکے لا جواب ذائقے اور خوشبو کی وجہ سے جانا جاتا ہے۔بنیادی طور پر اس بوٹی کاتعلق اٹلی،ترکی اور گریس کے علاقوں سے ہے۔اکثر کھانوں میں خاص طور پر اٹالین کھانوں میںاس کا استعمال کیا جاتا ہے۔لیکن پھر بھی اس کی حقیقی […]

The post 6 طریقوں سے اوریگانوقوت مدافعت میں اضافہ کرتا ہے: appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
6 Health benefit of Oregano in Urdu

بحیرہ وم کے ساحلی علاقوں میں پائی جانے والی جڑی بوٹی اوریگانو کو اسکے لا جواب ذائقے اور خوشبو کی وجہ سے جانا جاتا ہے۔بنیادی طور پر اس بوٹی کاتعلق اٹلی،ترکی اور گریس کے علاقوں سے ہے۔اکثر کھانوں میں خاص طور پر اٹالین کھانوں میںاس کا استعمال کیا جاتا ہے۔لیکن پھر بھی اس کی حقیقی خصوصیا ت سے بہت کم لوگ واقف ہیں۔
آپ چاہے اس کے مداح ہوں یانہ ہوں لیکن چھ وجوہات کی بناء پر آپ اسے اپنی غذامیں شامل کرکے اپنی قوت مدافعت کو بڑھا سکتے ہیں ۔

اینٹی بائیوٹک خصوصیات:

تحقیقات کے مطابق اوریگانو کا تیل انفیکشن کے علاج میں استعمال ہونے والی کم ازکم اٹھارہ دوائوں سے بہتر ہے۔اس بوٹی میں طاقتور اینٹی بائیوٹک خصوصیات موجود ہیں جوایسٹ، وائرس اور بیکٹیریا کو ختم کرنے میں مدد دیتی ہیں ۔


اب یہ آپ کے استعمال پر منحصر ہے کہ آپ اس کو تازہ، خشک یا تیل کی شکل میں استعمال کریں ۔یہ بوٹی بیکٹیریا کی نشوو نماء پر قابو پاکر آپ کو بیمار ہونے سے بچاتی ہے۔جس کے نتیجے میںقوت مدافعت بڑھتی ہے اور صحت اچھی ر ہتی ہے۔

غیرمعمولی اینٹی اوکسی ڈینٹس کی موجودگی:

یہ بوٹی فینولک ایسڈ اور فائٹوکیمیکل فلیوونوائڈسے بھرپور ہے۔یو ایس ڈی اے کے مطابق دوسری جڑی بوٹیوں کے مقابلے میںاوریگانو میں 2سے 30 گنا زیادہ اینٹی اوکسی ڈنٹس کی گنجائش ہوتی ہے۔مطلب یہ کہ اوریگانو میںبلیو بیری سے 4گنا اور کینو سے 12گنا زیادہ اینٹی اوکسی ڈینٹس ہوتے ہیں ۔

orenaga
اپنی غذا میں آدھا چائے کا چمچ اوریگانو شامل کرکے آپ تین کپ پالک سے حاصل ہونے والے اینٹی اوکسی ڈنٹس کے برابر حاصل کرسکتے ہیں ۔جسم سے ٹوکسن کو خارج کرکے یہ قوت مدافعت کوبڑھاتے ہیں اور جسم کو مضبوط بناتے ہیں ۔

مزید جانئے :پارسلے کے حیرت انگیز فوائد

حیرت انگیز اینٹی مائکروبیئل خصوصیات :

اس اہم طبی فائدے کی بناء پر اوریگانو کو نہایت طاقتور بوٹی کہا جاسکتا ہے۔اوریگانو سے بنایا گیا تیل بہت سے وائرل اور بیکٹیریئل انفیکشن کو ختم کرنے کے کام آتا ہے۔اسے ناک ،کان اور سانس کے انفیکشن میں بھی استعمال کیا جا سکتا ہے۔یہ فوائدکینسر سیلز کی نشونماء روکنے اور سوزش بڑھانے والے عناصر کوختم کرنے میں دوسروں سے آگے ہیں۔


کینسر سے مقابلہ کرنے کی خصوصیات کی بناء پر قوت مدافعت بڑھانے اور صحت کی بحالی کے لئے اوریگانو آئل کو خاص طو رپرترجیح دی جاتی ہے۔

خطرناک اجسام سے حفاظت:

 

اوریگانو آئل میں اینٹی اوکسی ڈینٹس خصوصیات وافر مقدار میں موجود ہیں اس وجہ سے یہ خطرناک اجسام سے بچانے میں بھی مدد دیتا ہے۔اس بوٹی میں موجود کارواکرول نہ صرف جسم میں اچھے بیکٹیریا پیدا کرکے توازن پیدا کرتا ہے بلکہ مجموعی طور پر صحت کو بہتر بناتا ہے۔

orenaga
خطرناک اجسام کے نقصان دہ اثرات سے بچا کریہ قوت مدافعت کو مضبوط بناتا ہے۔

اس آرٹیکل کو انگریزی میں پڑھنے کے لئے کلک کریں

انفیکشن سے بچاتا ہے:

قوت مدافعت کے لئے اس کا ایک خاص کام یہ بھی ہے کہ یہ وائرل ایفیکشن سے حفاظت کرتا ہے۔اوریگانو آئل جسے تازہ یا خشک اوریگانو پرفوقیت دی جاتی ہے ،بیکٹیریئل انفیکشن کے علاج کے لئے بھی مفید ہے۔ جس میں یورینری اور کلون ٹریکٹ انفیکشن۔ٹائفائڈ، کالرا،اسکن انفیکشن،خارش اورفوڈ پوائزننگ شامل ہے۔

oregano
مختصر یہ کہ یہ آپ کو بیماریوں کی وجہ بننے والے عوامل سے دور کھتا ہے۔

مزید جانئے :ہومیوپیتھی کے علاج میں کیا کریں کیا نہیں۔۔۔۔

پر اثر اینٹی فنگل خصوصیات:

بیکٹیریا ،وائرس،پروٹوزوااور فنجائی ،انفیکشن اور ان سے متعلق بیماریاں پیدا کرنے والے چار اہم عناصر ہیں ۔ان چاروں میں سے فنجائی سب سے خطرناک انفیکشن پیدا کرتا ہے۔عام طور پر ناک کان اور گلے میں ہونے والے مہلک انفیکشن کی وجہ فنجائی ہی ہوتا ہے۔اگر اس کا بروقت علاج نہ کیا جائے تو یہ دماغ کو متاثر کر سکتا ہے اور موت کا باعث بنتا ہے۔


اکثر اسکن انفیکشن کی وجہ بھی فنجائی ہوتا ہے۔اوریگانو کی اینٹی فنگل خصوصیات ان مضر صحت انفیکشن سے حفاظت کو یقینی بناتی ہیں ۔

حرف آخر:

جیسا کہ پہلے بھی بیان کیا جاچکا ہے کہ اوریگانوآئل بقیہ دو صورتوں کے مقابلے میں سب سے زیادہ پر تاثیر ہے۔پھر بھی آپ اسے تازہ یا خشک صورت میںبھی اپنی غذا میں شامل کرکے صحت کی جانب قدم بڑھا سکتے ہیں ۔یہ جس شکل میں بھی آپ کو مفید لگے اس کو استعمال کریں اور مضبوط قوت مدافعت کا لطف اٹھائیں۔

تحریر : ماہا آفریدی 


The post 6 طریقوں سے اوریگانوقوت مدافعت میں اضافہ کرتا ہے: appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
کیا ایکوپنکچر کے ذریعے وزن کم کیا جا سکتا ہے؟ https://htv.com.pk/ur/alternative-medicine/acupuncture-weight-loss Thu, 05 Apr 2018 11:25:07 +0000 https://htv.com.pk/ur/?p=27369 acupuncture-weight-loss

ایکوپنکچر (acupuncture) اور اس کی افادیت کے بارے میں مختلف لوگوں کے مختلف عقائد ہیں ۔روایتی چینی علاج کو ہر طرح کے درد،زخموں ،فلو ،گٹھیا یہاں تک کے وزن کم کرنے کے لئے بھی مفید سمجھا جاتا ہے۔ ایکوپنکچرکے حمایتیوں کا کہنا ہے کہ اگ آپ پورے یقین کے ساتھ ایکوپنکچر کا علاج کریں تووزن […]

The post کیا ایکوپنکچر کے ذریعے وزن کم کیا جا سکتا ہے؟ appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>
acupuncture-weight-loss

ایکوپنکچر (acupuncture) اور اس کی افادیت کے بارے میں مختلف لوگوں کے مختلف عقائد ہیں ۔روایتی چینی علاج کو ہر طرح کے درد،زخموں ،فلو ،گٹھیا یہاں تک کے وزن کم کرنے کے لئے بھی مفید سمجھا جاتا ہے۔ ایکوپنکچرکے حمایتیوں کا کہنا ہے کہ اگ آپ پورے یقین کے ساتھ ایکوپنکچر کا علاج کریں تووزن کم کرنے کے لئے اس سے بہتر کوئی علاج ہو ہی نہیں سکتا۔

وزن میں کمی اور ایکوپنکچر:

weight-loss-and-acupuncture.jpg

مسئلہ یہ ہے کہ اس کے لئے صرف وزن میں کمی کرناہی مقصد نہیں ہوتا بلکہ یہ ایک منظم ظرز زندگی ہوتا ہے۔اس کے لئے صرف غذا پر کنٹرول اور روزانہ ورزش ہی ضروری نہیں بلکہ ساتھ ہی اپنے جذبات اور سوچ کو بھی کنٹرول کرنا ضروری ہے۔ اس کا مطلب ہے کہ یہ آپ کی پوری نفسیات پر اثر انداز ہوتا ہے۔ دیکھا گیا ہے کہ جو لوگ وزن کم کرنا چاہتے ہیں وہ جلد ہی پریشانی اور ڈپریشن کا شکار بھی ہو جاتے ہیں۔ اسی لئے ایکوپنکچر (acupuncture) کا علاج سامنے آتا ہے ۔دوسرے طریقہ علاج جیسے وزن کم کرنے والی گولیاں اور ڈائٹ پلان کے برعکس اکوپنکچر نہ صرف کیلوریز کم کرنے میں مدد دیتا ہے بلکہ اچھی صحت بھی عطا کرتا ہے۔اس طرح آپ نہ صرف وزن میں کمی کریں گے بلکہ پورے طریقہ کار میں خود کو بہت اچھا محسوس کریں گے۔
سوال یہ ہے کہ وزن کم کرنے کے لئے ایکوپنکچر کس طرح کام کرتا ہے؟کچھ تحقیقات کے مطابق ،انسانی جسم میں کچھ توانائیاں موجود ہوتی ہیں ۔جب ان کا راستہ بیماری یا چربی روکتی ہے تو جسم میں تکلیف یا بیماری پیدا ہو جاتی ہے۔ان مضرتوانائیوں کوایکوپنکچر کی سوئیوں کے ذریعے جسم سے نکالا جا سکتا ہے۔ ایکوپنکچر کے زریعے جسم سے مضر توانائیوں کو نکالنے میں مدد ملتی ہے۔اس طرح جسم میں چربی جمع ہونے کے امکانات سے بچا جاسکتا ہے۔ ایکوپنکچر کے جدید ماہرین کا کہنا ہے کہ ایکوپنکچر کے لئے استعمال ہونے والی سوئیاں بجلی اور مقناطیس کی مدد سے مریض کے نروز کو سکون پہنچاتی ہیں ۔
بہت سے لوگ جنھوں نے اپنے وزن کے مسائل کے لئے ایکوپنکچر کروایا انھیںیہ تجربہ بھی ہواکہ ان کی بھوک میں کمی واقع ہوئی ہے جس سے ہر ہفتے ان کا وزن ایک سے دو پونڈ کم ہو جاتا ہے۔ اس طرح وہ وزن کم کر نے کے لئے اور بھی ذیادہ پر امید ہو جاتے ہیں اور اس طریقہ علاج سے پریشان نہیں ہوتے۔
ایکوپنکچر کرانے والے لوگوں کا یہ بھی کہنا ہے کہ ایک اچھی بات یہ بھی ہے کہ وزن میں یہ کمی مستقل ہوتی ہے اور ایکوپنکچر کرانے کے بعد انھیں نہیں لگتا کہ اب دوبارہ ان کا وزن بڑھے گا ۔لیکن ایسے بھی لوگ ہیں جو اس بات سے بالکل متفق نہیں کہ ایکوپنکچر (acupuncture) کے ذریعے وزن بھی کم کیا جاسکتا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ وزن کم کرنے کے لئے غذا میں کمی اور ورزش کی بھی ضرورت ہوتی ہے۔

کیا یہ واقعی کارآمد ہے؟

در حقیقت یہ ایک ذاتی تجربہ ہے جو آپ خود کرسکتے ہیں ۔اکثر لوگ وزن کم کرنے کے لئے ایکوپنکچر کی افادیت کی قسمیں کھاتے ہیں جبکہ دوسرے لوگوں کا کہنا ہے کہ اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا ۔اس لئے بہتر ہوگا کہ آپ اس سلسلے میں کسی ماہرسے مشورہ کریں اورپھر فیصلہ کریں۔


انگریزی آرٹیکل: سحرش قاضی
اردو ترجمہ: سائرہ شاہد

The post کیا ایکوپنکچر کے ذریعے وزن کم کیا جا سکتا ہے؟ appeared first on ایچ ٹی وی اردو.

]]>